پرسکون رہتا ہے

میری بگڑی صورت بگڑے حال پہ پرسکون رہتا ہے
مجھے کوئی دیکھے نہ وہ اکثر مجھے کہتا ہے

مجھے درد میں دیکھ نہیں سکتا وہ مہرباں
میری آہ پہ اشک اس کی آنکھ سے بہتا ہے

میرے لیے جینے کی خواہش رکھنے والا وہ
میرے خواہش کے مطابق خود کو بدلتا ہے

جب مخاطب ہوتی ہوں میں کسی اور سے
وہ ہمدم میرا دل ہی دل میں بہت جلتا ہے

جس دن دیکھتا نہیں صورت وہ میری
اداسی میں اس کا تمام دن پھر گزرتا ہے

ہائے دیکھو تو سہی موناؔ اس کی دیوانگی
دن رات وہ بس میری محبت کا دم بھرتا ہے
#ازقلم_مونا_رحمانی




Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

*

2 + 5 =