اردو شناسی

پاکستان اور دنیا میں اردو کے سفیر

(شیخ خالد زاہد) پھر کہا یہ جاتا ہے کہ ہم ہر مسلئے کو بیرونی ہاتھ کہہ کر ٹال مٹول کی نظر کردیتے ہیں ،کسی بھی مخصوص ہاتھ کی نشاندہی بھی نہیں کرتے جبکہ عوام کو مکمل یقین ہے کہ ہمارے خفیہ اداروں کی نظر سے کوئی بھی خفیہ ہاتھ ، خفیہ نہیں رہتا ۔ اب اردو کے نفاذ کو لے ... Read More »

*کشمیر*

کشمیر یہ فارسی زُبان کا لفظ ہے، کشمیر کے دو نام اور بھی ہیں *کِشمر* اور *کاشمَر* کشمیر دراصل کاشمر ہی کا نام ہے، اور اُسی مناسبت سے ہے۔ *کاشمر* تُرکستان کے قریب ایک گاؤں کا نام ہے، جہاں زرتشت یا زَردُشت جو کہ آگ کی پُوجا کا خالِق تھا، اُس نے اِس گاؤں میں سَرو کا ایک درخت لگایا ... Read More »

اَفوَاہ

*اَفوَاہ** عربی لفظ ہے جو *فُوہ* کی جمع ہے۔ *فُوہ* کے معنی *منہ* کے ہیں۔ *اَفوَاہ کے لفظی معنی* ** *بہت سے منہ* ** *مُراد*۔ جتنے منہ اُتنی باتیں ۔ *عام معنی*۔ بازاری خبر ، غیر معتبر بات ، مُشتبہ خبریں ، گَپ۔ بشکریہ * *ڈاکٹر فریدالدین شہاب* * Read More »

*پیر نابالغ*

پیر بوڑھے کو کہتے ہیں اور جب کسی آدمی کو بُڑھاپے تک عقل نہ آئے تو طنز کے طور پر اُسے پیرنا بالغ کہتے ہیں یہ مذاق اڑانے کا ایک طریقہ ہوتا ہے وہ بوڑھے ضرور ہیں مگر پیر نا بالغ ہیں اس سے ملتا جُلتا ایک اور محاورہ ہے کہ بوڑھا اور بچہ برابر ہوتا ہے یہاں اُن کمزوریوں ... Read More »

*اطلس*

اَطْلَس {اَط + لَس} (عربی) ط ل س، اَطْلَس عربی زبان سے اسم مشتق ہے۔ ثلاثی مجرد کے باب سے اسم ہے۔ اردو میں بطور اسم نکرہ استعمال ہوتا ہے۔ اردو میں سب سے پہلے 1564ء کو “حسن شوقی “کے دیوان میں مستعمل ملتا ہے۔ اسم نکرہ (مذکر، مؤنث – واحد) *معانی* 1. ریشم اور سوت کا ملواں بنا ہوا ... Read More »

*طائف*

طائف کے معنی عربی میں، طواف کرنے والا کے ھیں، طائف حجاز کے ایک قصبہ کا نام بھی ھے جہاں سبز ہزار اور چمن بکثرت ھیں۔ *ڈاکٹر فریدالدین شہاب* Read More »

*طَربِیَہ*

طرب عربی کا لفظ ھے جس کے معنی خوشی، شادمانی کے ھیں۔ *طربیہ* اُس قِصّہ یا ڈرامے کو کہتے ھیں جس کا انجام خوشی ھو۔ Read More »

*چَاقُو*

چاقو تُرکی زُبان کا لفظ یے جو کہ تُرکی کے دوسرے لفظ *چاق* سے نِکلا ہے، چاق کے معنی، صحیح، مضبوط، چالاک کے ہیں *چاقو کے لفظی معنی* چالاکی کا ہتھیار کے ہیں، *عام معنی* بند ہونے والی چُھری۔ *ڈاکٹر فریدالدین شہاب* Read More »

*اطہر*

اَطْہَر {اَط + ہَر} (عربی) ط ہ ر، طاہِر، اَطْہَر عربی زبان سے اسم مشتق ہے۔ ثلاثی مجرد کے باب سے اسم فاعل طاہر سے اسم تفضیل ہے۔ اردو میں بطور اسم صفت مستعمل ہے۔ اردو میں سب سے پہلے 1732ء کو “کربل کتھا” میں مستعمل ملتا ہے۔ صفت ذاتی *معانی* پاک و پاکیزہ، پاکیزہ تر، بہت زیادہ پاک (عموماً ... Read More »

*مُستَشرِق، مُستغرب

*مُستشرق،* وہ فرنگی جو مشرقی زُبانوں اور علوم کا ماہر ھو۔ *مُستغرب* وہ مشرقی جو مغربی زُبانوں اور علوم کا ماہر ھو۔ *ڈاکٹر فریدالدین شہاب* Read More »